اے بی کی سوانح عمری کی ریلیز سے پہلے ہندوستان میں دھوم

جنوبی افریقہ کے اسٹار بلے باز اے بی ڈی ویلیئرز اپنی سوانح عمری کے اگلے ہفتے ریلیز ہونے سے پہلے ہی اسے ہندستان میں ملے شاندار رد عمل سے پرجوش ہیں۔اپنی سوانح عمری کی ریلیز کو لے کر بلے باز نے کہا کہ وہ جب بھی ہندوستان میں کھیلتے ہیں لوگوں سے انہیں مثبت ردعمل ملتا ہے۔انہوں نے کہا کہ میں جب بھی ہندستان میں کھیلنے جاتا ہوں اسٹیڈیم میں اے بی بی کی آواز ہی سنائی دیتی ہے اور میں خود کی ہی آواز نہیں سن پاتا ہوں۔میرے لئے یہ امید سے باہر ہے۔جنوبی افریقہ کے بلے باز نے ساتھ ہی بتایا کہ گذشتہ سال ہندستان میں فائنل ون ڈے کے دوران وانکھیڑے اسٹیڈیم میں لوگوں کی رائے انتہائی خاص تھی اور وہ اسے کبھی نہیں بھول سکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایسا پوری ہی سیریز میں ہو رہا تھا کہ لوگ میرا نام پکار رہے تھے۔ لیکن بعد میں مجھے احساس ہوا کہ میں اپنے گھر سے بہت دور ہوں لیکن لوگ میری کس طرح سے حمایت کر رہے ہیں جیسے کہ میں انہیں کے ملک کا کھلاڑی ہوں جبکہ میں ان کی ٹیم کے خلاف کھیل رہا تھا۔ڈی ویلیئرز کی سوانح عمری کی ناشر پین میك ملان کے منیجنگ ڈائریکٹر ٹیری مورس نے کہا کہ ہم پہلے سے جانتے تھے کہ اے بی کی سوانح عمری کو جنوبی افریقہ میں بہت اچھی رائے ملے گی۔ لیکن ہمیں یہ نہیں پتہ تھا کہ برصغیر میں بھی اس کو لے کر اتنا جوش ہو گا ۔